منگل , مارچ 26 2019

ٹرمپ انتظامیہ حوثی ملیشیا کو دہشت گرد جماعت قرار دینے کے لیے کوشاں

یہ منصوبہ مشرق وسطی میں ایران کے ساتھ مربوط جماعتوں کے حوالے سے سخت موقف اختیار کرنے کے سلسلے میں امریکی مساعی کا حصّہ ہے۔
یہ اقدام یمن میں باغی ملیشیا کو زیادہ تنہا کر سکتا ہے۔ تاہم امریکی ذمّے داران کے بیانات کے مطابق امریکی فیصلے پر عمل درآمد کی صورت میں یمن میں باغیوں کے زیر کنٹرول علاقوں میں انسانی بحران میں اضافے کا اندیشہ ہے۔
مذکورہ ذمّے داران نے نام ظاہر نہ کرنے کی شرط پر بتایا کہ امریکی انتظامیہ نے حوثیوں کی سرزنش کے لیے ممکنہ اقدامات کے ایک مجموعے پر غور کیا ہے اور ابھی تک فیصلہ نہیں کیا گیا ہے۔

Check Also

سعودی عرب پر حوثی باغیوں کے ڈرون حملے

یمن حکومت کے باغی حوثیوں کی جانب سے سعودی عرب پر ڈرون طیارے سے کیے …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے