رہنما پیپلز پارٹی ناصر عباس تارڑ کی سری لنکا میں ایسٹر کی تقریبات میں ہونے والے 8 بم دھماکوں کی شدید مذمت

سری لنکا میں ایسٹر کی تقریبات کے موقع پر گرجا گھروں اور ہوٹلز میں 8 بم دھماکوں کے نتیجے میں 290 افراد ہلاک اور 500 زخمی ہوگئے۔ چیئرمین پاکستان پبلک ایڈ ٹرسٹ ناصر عباس تارڑ کی جانب سے اظہار یکجہتی۔

خبررساں اداروں کے مطابق سری لنکا کے 4 ہوٹلوں اور 3 مسیحی عبادت گاہوں پر 8 دھماکے ہوئے۔ پولیس کے مطابق دارالحکومت کے ایک چرچ اور متعدد ہوٹلز میں دھماکے ہوئے جبکہ کولمبو کے مضافات میں قائم 2 مسیحی عبادت گاہوں کو بھی نشانہ بنایا گیا۔

سری لنکا میں دھماکوں میں ہلاک ہونے والے اور ذخمیوں سے اور انکے لواحقین سے رہنماپیپلز پارٹی و چیئرمین پاکستان پبلک ایڈ ٹرسٹ ناصر عباس تارڑ نے گہرے دکھ و افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ اس دکھ بھری خبر  کوسن کر مجھےبہت دکھ ہوا۔ انہوں نے کہا کہ میں اس دہشت گردی کی پرزور مذمت کرتا ہوں اور  انہوں نے متاثرین سے دلی ہمدردی و تعزیت کا اظہار کیا۔انہوں نے کہا کہ انسان دشمن ان درندوں کو عبرتناک سزا ملنی چاہیئے۔ انہوں نے کہا کہ چند عناصر نے پوری دنیاکا امن وامان تباہ کر کے رکھ دیا ہے۔

دہشت گردوں کے حملوں کا نشانہ کولمبو میں قائم چرچ ‘سینٹ انتھونی شرائن’، نیگومبو کا ‘سینٹ سیبسٹیرین چرچ’ اور باتیکالوا میں قائم ‘زیون چرچ’ تھے۔ اس کے علاوہ جن ہوٹلز کو نشانہ بنایا گیا ان میں کنامن گارڈ، شانگری-لا، کنگس بری اور ٹروپوٹیکل ان شامل ہیں۔

پولیس کے مطابق ہلاک ہونے والوں میں 32 غیر ملکی بھی شامل ہیں، جن میں امریکی، برطانوی اور نیدر لینڈز کے شہری شامل ہیں۔ ملک میں مختصر وقت کے لیے کرفیو فانذ کردیا گیا جبکہ عارضی طور پر سوشل میڈیا پر پابندی عائد کردی گئی۔سری لنکا کے صدر نے میتھری پالا سری سینا نے اپنے پیغام میں کہا کہ انہیں حملوں سے دھچکا لگا ہے اور ساتھ ہی عوام کو صبر کرنے کی تلقین بھی کی۔

 

 

Check Also

بھارتی فنکاروں نے مودی کے خلاف اپنی جماعت کھڑی کر دی۔اس جماعت میں کون کون شامل۔

نئی دہلی: بھارتی نامور اداکار نصیرالدین شاہ سمیت 600 تھیٹر فنکاروں نے بھارتی وزیر اعظم …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *