منڈی بہائوالدین میں ’غیرت کے نام پر’ لڑکا اور لڑکی قتل

صوبہ پنجاب کے علاقے منڈی بہا الدین میں والد نے مبینہ غیرت کے نام پر اپنی بیٹی سمیت ایک لڑکے کو فائرنگ کرکے قتل کردیا۔

پولیس کے مطابق یہ واقعہ آہدی شریف میں پیش آیا، جہاں لڑکی کے والد نے اپنی بیٹی کو لڑکے کے ساتھ دیکھا اور غصے میں آکر فائرنگ کرکے قتل کردیا۔

پولیس کا کہنا تھا کہ دوہرے قتل کی واردات غیرت کا شاخسانہ معلوم ہوتی ہے جبکہ قتل ہونے والوں میں 19 سالہ لڑکا الماس جبکہ 17 سالہ لڑکی توشیبا شامل ہے۔

واقعے کی تفصیل بتاتے ہوئے پولیس کا کہنا تھا کہ والد نے اپنی بیٹی کو لڑکے کے ساتھ دیکھا اور فائرنگ کردی، جس کے نتیجے میں دونوں افراد موقع پر جاں بحق ہوگئے۔

تاہم ملزم فائرنگ کے فوری بعد فرار ہوگیا جبکہ لاشیں ہسپتال منتقل کردی گئیں۔

خیال رہے کہ اس سے قبل بھی ملک کے مختلف حصوں میں مبینہ غیرت کے نام پر قتل کے واقعات سامنے آتے رہے ہیں، جس میں کئی افراد کو قتل کیا جاچکا ہے۔

رواں سال ماہ فروری میں کوہاٹ میں ایک شخص نے غیرت کے نام پر اپنی بہن اور ایک نوجوان کو قتل کردیا تھا۔

اس سے قبل گزشتہ برس دسمبر میں منڈی بہاوالدین میں سگے بھائی نے مبینہ طور پر غیرت کے نام پر گلا دبا کر 17 سالہ بہن کو قتل کیا تھا۔

 

پولیس کا کہنا تھا کہ اس سے قبل مقتولہ پر الزام تھا کہ انہوں نے چند ماہ قبل اپنے خاوند کو فائرنگ کرکے قتل کیا تھا۔

گزشتہ برس جون میں ڈیرہ غازی خان میں عیدالفطر کے دوران ایک مقامی سوشل میڈیا ایکٹیوسٹ اور شاعرہ کو مبینہ طور پر غیرت کے نام پر قتل کردیا گیا تھا۔

یہ بھی یاد رہے کہ 20 مئی 2018 چکوال میں 4 بھائیوں نے مبینہ طور پر غیرت کے نام پر اپنی 50 سالہ والدہ کو قتل کردیا تھا۔

Check Also

ٹیم میک گرین پاکستان کا میانوال رانجھا میں پڑاؤ

ٹیم میک گرین پاکستان منڈی بہاوالدین کے نوجوانوں نے آج گورنمنٹ پبلک اسلامیہ ہائی سکول …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *