سعودی عرب پر حوثی باغیوں کے ڈرون حملے

یمن حکومت کے باغی حوثیوں کی جانب سے سعودی عرب پر ڈرون طیارے سے کیے گئے حملے پر شدید تشویش کا اظہار کرتے ہوئے حملہ آور طیارہ مار گرانے پر سعودی فوج کو سراہا ہے۔

یمن کی جمہوری حکومت کے خلاف بغاوت کرنے والی حوثی باغیوں نے جمعے کو سعودی عرب پر ڈرون طیارے سے حملے کی کوشش کی تھی۔اس مرحلے پر سعودی افواج نے بروقت کارروائی کرتے ہوئے ڈرون کو فضا میں ہی تباہ کردیا تھا لیکن اس کے نتیجے میں 6افراد زخمی ہو گئے تھے۔

سعودی عرب کی زیر قیادت اتحادی افواج کے ترجمان کرنل ترکی المالکی نے کہا تھا کہ ڈرون میں ابہا کے شہری علاقے کو نشانہ بنایا گیا تھا۔دفتر خارجہ کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا کہ پاکستان، سعودی عرب کی علاقائی سالمیت اور حرمین شریفین کو لاحق کسی قسم کے خطرات کےخلاف سعودی حکومت اور عوام سے مکمل تعاون اور یکجہتی کا اعادہ کرتا ہے۔

بیان میں کہا گیا کہ جن حملوں میں نہتے شہریوں کو نشانہ بنایا جائے وہ عالمی قانون کی کھلی خلاف ورزی اور علاقائی امن و استحکام کے لیے سنگین خطرہ ہیں۔دفتر خارجہ نے کہا کہ ہم ایسے حملوں کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہیں اورہر قسم کی دہشت گردی اور ایسے عزائم ناکام بنانے کے لیے سعودی حکومت کے شانہ بشانہ کھڑے ہیں۔

پاکستان نے سعودی افواج کی بروقت کارروائی پر انہیں سراہتے ہوئے کہا کہ ڈرون کا ملبہ گرنے سے سعودی باشندوں اور تارکین وطن کے زخمی ہونے اور املاک کو نقصان پہنچنے کی خبریں تشویش کا باعث ہیں۔یہ پہلا موقع نہیں کہ حوثی باغیوں کی جانب سے سعودی فضائی حدود خلاف ورزی یا حملے کی کوشش کی گئی ہو بلکہ اس سے قبل بھی اس طرح کی متعدد کوششیں کی گئی جنہیں ہر مرتبہ ناکام بنا دیا گیا۔گزشتہ ماہ بھی حوثیوں کی جانب سے سعودی عرب پر فضائی حملے کی کوشش کی گئی تھی جسے سعودی اتحاد نے ناکام بنادیا تھا اور جواباً باغیوں کے اڈوں پر فضائی حملے کر کے انہیں بڑے پیمانے پر نقصان پہنچایا تھا۔

Check Also

افغان پولیس اہلکار نے فائرنگ کر کے اپنے ہی 7 ساتھیوں کو قتل کر ڈالا

قندھار: افغان پولیس اہلکار نے اپنے ہی ساتھیوں پر فائرنگ کر کے 7 اہلکاروں کو …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *