خاشقجی قتل: کینیڈا نے بھی ‘ملوث’ سعودی شہریوں پر پابندی لگادی

(پی پی این مانیٹرنگ ڈیسک) امریکا اور جرمنی کے بعد کینیڈا نے بھی صحافی جمال خاشقجی کے قتل میں مبینہ طور پر ملوث ولی عہد محمد بن سلمان کے قریبی ساتھیوں سمیت 17 سعودی افراد پر پابندیوں کا اعلان کردیا۔

‘اے ایف پی’ کے مطابق کینیڈا کی وزیر خارجہ ریسٹریا فریلینڈ نے کہا کہ ’17 سعودی افراد کے اثاثے منجمد کر دیئے گئے ہیں جبکہ ان کی کینیڈا میں داخلے پر پابندی ہوگی۔

انہوں نے واضح کیا کہ کینیڈا کی حکومت کی تجویز پر مذکورہ افراد پر ماورائے قانون قتل کی بنیاد پر پابندی لگائی گئی۔

رواں برس 2 اکتوبر 2018 کو جمال خاشقجی اس وقت عالمی میڈیا کی شہ سرخیوں میں رہے جب وہ ترکی کے شہر استنبول میں قائم سعودی عرب کے قونصل خانے میں داخل ہوئے لیکن واپس نہیں آئے، بعد ازاں ان کے حوالے سے خدشہ ظاہر کیا گیا کہ انہیں قونصل خانے میں ہی قتل کر دیا گیا ہے۔

اس دوران کینیڈا جمال خاشقجی کے قتل سے متعلق ’شفاف تحقیقات‘ کا مطالبہ کرتا رہا، لیکن سعودی عرب کی جانب سے مبہم وضاحت اور غیر مستقل رویہ جاری رہا۔

 

Check Also

افغان پولیس اہلکار نے فائرنگ کر کے اپنے ہی 7 ساتھیوں کو قتل کر ڈالا

قندھار: افغان پولیس اہلکار نے اپنے ہی ساتھیوں پر فائرنگ کر کے 7 اہلکاروں کو …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *