امریکا، یمن میں سعودی اتحاد کو فوجی تعاون روک دے، امدادی تنظیمیں

(پی پی این مانیٹرنگ ڈیسک) دنیا کی 5 بڑی امدادی تنظیموں نے امریکا پر زور دیا ہے کہ وہ یمن کی جنگ میں سعودی اتحاد کی فوجی مدد فوری طور پر روک دے جس سے لاکھوں افراد کی جانیں بچ جائیں گی۔

اے پی’ کی رپورٹ کے مطابق انٹرنیشنل ریسکیو کمیٹی، اوکسفیم امریکا، کیئر یو ایس، سیو چلڈرن اور نارویجن ریفیوجی کونسل کی جانب سے یمن میں سعودی اتحادیوں اور حوثی باغیوں کے درمیان جاری جنگ کو روکنے کے لیے ایک مشترکہ اعلامیہ جاری کیا گیا۔

بیان میں کہا گیا ہے کہ یمن میں اگر فریقین کی جانب سے اپنے اقدامات کو فوری طور پر تبدیل نہ کیا گیا تو ایک کروڑ 40 لاکھ افراد کی جانیں خطرے میں ہوں گی۔

اعلامیے میں کہا گیا ہے کہ دونوں جانب سے اپنے عمل اور پالیسیوں سے یمن کی معیشت کو نظر انداز کیا گیا ہے جس کے باعث مہنگائی میں روز بروز اضافہ ہورہا ہے۔

امدادی تنظیموں کا کہنا ہے کہ ‘بھوک کو یمن کے شہریوں کے خلاف ہتھیار کے طور پر ہرگز استعمال نہیں کرنا چاہیے’۔

سعودی عرب کے اتحادی امریکا سے مطالبہ کرتے ہوئے ان تنظیموں کا کہنا تھا کہ امریکا، یمن میں خانہ جنگی کے فوری خاتمے کے لیے بالخصوص سعودی عرب اور متحدہ عرب امارات پر سفارتی دباو کے ذریعے اپنا اثر و رسوخ استعمال کرے۔

گزشتہ ماہ ترکی میں صحافی جمال خاشقجی کے سعودی عرب کے قونصل خانے میں قتل کے بعد عالمی برادری نے بھی امریکا پر زور دیا تھا کہ وہ سعودی عرب سے اتحاد ختم کرکے یمن میں فوری جنگ بندی کے لیے دباؤ بڑھائے۔

Check Also

افغان پولیس اہلکار نے فائرنگ کر کے اپنے ہی 7 ساتھیوں کو قتل کر ڈالا

قندھار: افغان پولیس اہلکار نے اپنے ہی ساتھیوں پر فائرنگ کر کے 7 اہلکاروں کو …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *